You are currently viewing سورۃ الطہٰ قرآن کا 20 واں باب ہے یہ 135 آیات پر مشتمل ایک لمبی سورت ہے
surah al taha quran pak ka 20waa bab hy ye 135 ayato per mushtmil ik lambi surhat hey

سورۃ الطہٰ قرآن کا 20 واں باب ہے یہ 135 آیات پر مشتمل ایک لمبی سورت ہے

  • Post author:
  • Post category:Quran Pak

ضرور سورۃ الطہٰ (عربی: سورة طه، “طہ-ہا”) قرآن کا 20 واں باب ہے۔ یہ 135 آیات پر مشتمل ایک لمبی سورت ہے جو مکہ میں نازل ہوئی۔ اس سورت کا نام اس کی پہلی آیت کے پہلے دو حروف طہ ہا کے نام پر رکھا گیا ہے۔

سورۃ الطہٰ موسیٰ کی پیدائش سے لے کر ان کے نبی ہونے تک کا قصہ بیان کرتی ہے۔ اس سورت میں اللہ پر ایمان کی اہمیت، اس کی اکیلے عبادت کرنے کی ضرورت اور یوم آخرت کے بارے میں بھی بات کی گئی ہے۔سورہ طہٰ کے چند اہم موضوعات میں شامل ہیں:اللہ کا وجود اور وحدانیایمان اور عبادت کی اہمیتموسیٰ کی نبوتجزا کا دنکائنات میں اللہ کی نشانیاںآزمائشوں میں صبر اور ثابت قدم رہنے کی ضرورت ہے۔سورہ طٰہٰ ایک خوبصورت اور متاثر کن سورت ہے جو ہمیں اللہ کی عظمت اور اس کی قدرت کی یاد دلاتی ہے۔ یہ دنیا بھر کے مسلمانوں کے لیے راحت اور رہنمائی کا ذریعہ ہے۔سورہ طٰہٰ کی چند آیات یہ ہیں جو کثرت سے پڑھی جاتی ہیں:”طہ۔ ہم نے آپ پر قرآن اس لیے نازل نہیں کیا کہ آپ کو تکلیف پہنچائیں۔” (20:1-2’’کہو اے میرے رب میرے علم میں اضافہ‘‘ (20:114’’اور یقیناً ہم تمہیں خوف اور بھوک اور مال و جان اور پھلوں کے نقصان سے ضرور آزمائیں گے لیکن صبر کرنے والوں کو خوشخبری سنا دو‘‘۔ (20:155)”اور بے شک ہم نے قرآن کو نصیحت کے لیے آسان کر دیا ہے، تو ہے کوئی یاد کرنے والا؟” (20:17)سورۃ الطہٰ اللہ پر ایمان کی اہمیت اور اس کی رہنمائی کی ایک طاقتور یاددہانی ہے۔ یہ ایک ایسی سورت ہے جس کی تلاوت کسی بھی وقت، کہیں بھی کی جا سکتی ہے اور یہ یقینی طور پر پڑھنے والوں کے لیے سکون اور اطمینان بخشتی ہے۔