You are currently viewing المقتدیرعربی زبان کا لفظ ہے جس کا  مطلب  قادر مطلق ہے یہ اللہ کے 99 ناموں میں سے ایک ہے
al muqtadir arbi zuban ka lafz hai is ka matlab hey matlik ye allah kay 99 namoo me sey ik name hey

المقتدیرعربی زبان کا لفظ ہے جس کا مطلب قادر مطلق ہے یہ اللہ کے 99 ناموں میں سے ایک ہے

  • Post author:
  • Post category:Islam

ضرور اللہ المقتدیر کا عربی میں مطلب ہے ” قادر مطلق”۔ یہ اللہ (SWT) کے 99 ناموں میں سے ایک ہے، جو اس کی صفات ہیں جو اس کے کمال اور عظمت کو ظاہر کرتی ہیں۔

المقتدر لفظ “قدر” سے ماخوذ ہے جس کا مطلب ہے “طاقت حاصل کرنا” یا “قابل ہونا”۔ اللہ مقتدیٰ وہ ہے جو کائنات کی ہر چیز پر مکمل قدرت اور کنٹرول رکھتا ہے۔ وہ جو چاہے کر سکتا ہے اور کوئی چیز اس کی طاقت سے باہر نہیں ہے۔قرآن مجید میں متعدد مقامات پر اللہ المقتدیر کا ذکر ہے۔ مثال کے طور پر سورہ بقرہ میں اللہ تعالیٰ فرماتا ہے۔”اور اللہ ہر چیز پر قادر ہے۔” (2:20)سورہ مائدہ میں اللہ تعالیٰ فرماتا ہے۔”اور اللہ ہر چیز پر قادر ہے۔” (5:120)المقتدر کا نام ہمیں ہر چیز پر اللہ کی قدرت اور کنٹرول کی یاد دلاتا ہے۔ یہ ہمیں یاد دلاتا ہے کہ ہمیں صرف اس پر بھروسہ کرنا چاہیے نہ کہ خود پر۔ ہمیں اللہ پر بھروسہ رکھنا چاہیے اور تمام معاملات میں اسی سے مدد مانگنی چاہیے۔اللہ المقتدیر کے نام پڑھنے کے چند فوائد یہ ہیں:یہ اللہ کی قدرت اور کنٹرول پر ہمارا ایمان بڑھاتا ہے۔اس سے ہمیں اللہ پر بھروسہ کرنے میں مدد ملتی ہے نہ کہ خود پر۔یہ ہمیں چیلنجوں اور مشکلات کا مقابلہ کرنے کی طاقت دیتا ہے۔اس سے ہمیں اپنے مقاصد اور مقاصد حاصل کرنے میں مدد ملتی ہے۔یہ ہمیں نقصان اور بدقسمتی سے بچاتا ہے۔اگر آپ کو کسی مشکل کا سامنا ہے تو آپ اللہ المقتدر کا نام پڑھ کر اس سے مدد مانگ سکتے ہیں۔ وہ وہی ہے جو آپ کو کسی بھی چیلنج پر قابو پانے میں مدد کرسکتا ہے۔